19/08/2020

Noha 2020 Jon Abbas - Ajj Zahra ke Gulistan:








نوحہ خواں جون عباس جعفری نے محرم کے لیے نیا نوحہ فروغ عزا سے ریکارڈ کیا ہے۔ جس کا عنوان ہے    آج زہرا ؑ کے گلستاں پہ خزاں چھائی ہے  یہ نوحہ بہت اچھے انداز میں پڑھا گیا ہے مومنین جب اس نوحے کو سنیں گے تو ان کے دلوں میں کربلا کی یاد تازہ ہو جائے گی۔ یہ نوحہ محمد ریاض اور محمد فدا نے لکھا ہے اور اس کی طرز عدنان علی خان نے  بنائی ہے

آج زہرا ؑ کے گلستاں پہ خزاں چھائی ہے
   بعد شبیر ؑ قیامت کی گھڑی آئی ہے
                 ۱
   ام لیلیٰ کی کمائی کو نہ برباد کرو
آج ہم شکل پیمبر نے سنا کھائی ہے
                 ۲
  خالی جھولے کو جھلائے گی سکینہ ؑ کیسے
روز ن ِ خیمہ سے زینب ؑ کی صداآئی ہے
                 ۳
پاؤں میں بیڑیاں اور پشت پہ دروں کے نشاں
    آنکھ سجادؑ کی ہائے خون سے بھر آئی ہے
                  ۴
کس نے مارے ہیں تماچے تیرے رخساروں پر
      لاش عباس کی دریا پہ بھی تھرائی ہے




Noha 2020 Jon Abbas - Ajj Zahra ke Gulistan





Jon Abbas Jaffri recited Noha for Muharram 2020 " Ajj Zahra ke gulistan me khizan chai hy" . This Noha is recited in a unique way . Audio Recording is done by Farogh e Aza Studio and Video Recording and releasing is also done by our network Farogh e Aza. Noha is written by M Fida and M Riyaz and composed by Adnan Ali Khan .
                          

       Noha Lyrics

Ajj Zahra ke Gulistan pe khizan chai hy
Baad Shabir Qayamat ki ghari aai hy

1 : Umm e Laila ki Kamai ko na barbad karo
      Ajj Hum shakal e payambar ny sina khai hy

2 : Khali jhooly ko jhulaye gi Sakina kesy
      Rozan e Khaima se zainab ki sada aai hy

3 :  Paon me berian aur pusht pe duron ke nishan
      Ankh Sajjad ki haye khoon se bhar aai hy

4 : Kis ny mary hain tamachy tery rukhsaron per
      kis ny mary hain tamachy tery rukhsaron per



Noha 2020 Jon Abbas - Ajj Zahra ke Gulistan


No comments: