19/09/2020

Allama asif alvi ka tamam Molviyon se sawal 



علامہ آصف رضا علوی نے دوران خطاب واقعہ کربلا پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ کربلا وہ واحد جنگ تھی جس میں بےشمار ایسے واقعات ہوئے جو پہلے کسی جنگ میں نہ ہوئے تھے ۔ واقعہ کربلا بے شمار ایسے حقائق سامنے لایا جو پہلے کسی جنگ میں سامنے نہیں آئے تھے ۔ اس واقعے نے حق و باطل کا فرق واضح کیا. آج اگر کسی سے بھی سوال کیا جائے کہ واقعہ کربلا کی بنیادی وجہ کیا تھی تو وہ یہی کہے گا کہ امام حسین (ع) کا یزید کی بیعت سے انکار اس جنگ کی وجہ بنا اور اگر سوال کیا جائے کہ بیعت مانگنے والا حق پر تھا یا انکار کرنے والا تو ہر مسلک کا جواب یہی ہوگا کہ امام حسین (ع) حق پر تھے ۔ امام حسین (ع) کا بیعت سے انکار یہ ثابت کرتا ہے کہ ہر دور میں معصوم سے بیعت مانگنے والا غلط ہے ۔ جب یزید نے امام حسین (ع) سے بیعت مانگی تو آپ نے فرمایا مجھ جیسا تجھ جیسے کی بیعت نہیں کرتا۔ 26 رجب کو مولا نے یہ کہہ کر انکار کیا، 28 رجب کو وطن چھوڑا , 2 محرم کو کربلا پہنچے، 28 رجب سے 2 محرم تک 72 لوگ مولا کے ساتھ تھے بیعت سے انکار کر چکے تھے ۔ آج ان 72 کے نام، ولدیت، قبیلے سب کو یاد ہیں مگر وہ ایک لاکھ لوگ جنہوں نے یزید کی بیعت کی ، ان کا کیوں نہیں بتایا جاتا، ان لوگوں کے نام کیوں نہیں بتائے جاتے جنہوں نے بیعت کی اور یزید کو خلیفہ تسلیم کیا۔


علامہ آصف رضا علوی نے دوران خطاب واقعہ کربلا پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ کربلا وہ واحد جنگ تھی جس میں بےشمار ایسے واقعات ہوئے جو پہلے کسی جنگ میں نہ ہوئے تھے ۔ واقعہ کربلا بے شمار ایسے حقائق سامنے لایا جو پہلے کسی جنگ میں سامنے نہیں آئے تھے ۔ اس واقعے نے حق و باطل کا فرق واضح کیا. آج اگر کسی سے بھی سوال کیا جائے کہ واقعہ کربلا کی بنیادی وجہ کیا تھی تو وہ یہی کہے گا کہ امام حسین (ع) کا یزید کی بیعت سے انکار اس جنگ کی وجہ بنا اور اگر سوال کیا جائے کہ بیعت مانگنے والا حق پر تھا یا انکار کرنے والا تو ہر مسلک کا جواب یہی ہوگا کہ امام حسین (ع) حق پر تھے ۔ امام حسین (ع) کا بیعت سے انکار یہ ثابت کرتا ہے کہ ہر دور میں معصوم سے بیعت مانگنے والا غلط ہے ۔ جب یزید نے امام حسین (ع) سے بیعت مانگی تو آپ نے فرمایا مجھ جیسا تجھ جیسے کی بیعت نہیں کرتا۔ 26 رجب کو مولا نے یہ کہہ کر انکار کیا، 28 رجب کو وطن چھوڑا , 2 محرم کو کربلا پہنچے، 28 رجب سے 2 محرم تک 72 لوگ مولا کے ساتھ تھے بیعت سے انکار کر چکے تھے ۔ آج ان 72 کے نام، ولدیت، قبیلے سب کو یاد ہیں مگر وہ ایک لاکھ لوگ جنہوں نے یزید کی بیعت کی ، ان کا کیوں نہیں بتایا جاتا، ان لوگوں کے نام کیوں نہیں بتائے جاتے جنہوں نے بیعت کی اور یزید کو خلیفہ تسلیم کیا۔

No comments: